تازہ ترینپاکستان

ملعونہ آسیہ کی رہائی کے فیصلے پر درگاہ عالیہ قاسمیہ فیروزیہ کا شدید رد عمل

پہلے سے طے شدہ کیس نے پوری امت کی دل آزاری کی،جوہر چورنگی پر دھرنے کے دوران خطاب

کراچی (اسٹاف رپورٹر) تنظیم اصلاح المسلمین کے صاحبزادہ سید عثمان فیروزی ترمزی نے جوہر چورنگی پر دھرنے کے دوران اپنے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایسا محسوس ہورہا ہے کہ امریکہ و مغرب اور سیکولر و لبرل قوتوں کے گٹھ جوڑ میں عدلیہ بھی اس کا حصہ بن گئی ہے آج 31اکتوبر غازی علم دین کی شہاد ت کے دن کے موقع پر یہ فیصلہ کیاگیا اور سونے پر سہاگہ میڈیا کی خاموشی نے بہت کچھ واضح کردیا, میڈیا کے آزادی اور اظہار رائے کی آزادی کے دعویدار کہاں ہیں ؟گستاخِ رسول ﷺ کی رہائی کے فیصلے پر یہ تمام نام نہاد عوامی جماعتیں کہاں ہیں؟ ان کا مزید کہنا تھا کہ نے کہاکہ امریکا ، برطانیہ ، یورپ ، لبرل اور سیکولر قوتیں یہ بات اچھی طرح سمجھ لیں کہ مسلمان شان رسالت ﷺ پر گستاخی کسی صورت میں بھی قبول نہیں کریں گے، چند ڈالروں اور پیسوں کے عوض دینی وملی غیرت و حمیت کو فروخت نہ کیا جائے ، صاحبزادہ سید عثمان فیرزی نے کہاکہ ملعونہ آسیہ کی رہائی کے فیصلے نے پوری امت کی دل آزاری کی ہے اور گہرا گھاو لگایاہے ، حکومت نے عدلیہ کے ذریعے ملعونہ آسیہ کی رہائی کا راستہ نکالاہے، امریکہ و مغرب کو خوش کرنے کے لیے اور بیرونی ایجنڈے اور عزائم کو پورا کرنے کے لیے 20کروڑ عوام اور پوری امت کی احساسات وجذبات کو مجروح کیا گیاہے .جوہر چورنگی پر دہرنا دیاگیا رہا ہے جس میں جماعت قاسمیہ فیروزیہ کے مریدین و عقیدت مند بھی شامل تھے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close